Friday Sermon – Khalifa IV – 18-05-1984




Friday Sermon – Khalifa IV – 18-05-1984

 خطبہ جمعہ خلیفۃ المسیح الخامس مرزا طاہر احمد

Friday Sermon 18-05-1984

ولا الہ الا اللہ اصول صور اللہ حیات اللہ ان اللہ اللہ اللہ اللہ اللہ رب العزتملال یار پاکستان میں بنا لے بنا لیا دے نعت خواں اللہ ہیں جو بغیر یہ ہے کہ قوم کو ان باتوں کے پیچھے ہیں ان کے علاقوں کو اطلاعات کے لئے جو کچھ کہا گیا ہے لیکن ایک بات معلوم ہے ہے یہ راز کسی اور پر ظاہر ہو یا نہ ہو اللہ تعالی کا ہمیشہ سے ظاہر ہے اور اور آج سے چودہ سو برس اب تک سو سے بھی زائد عرصہ پہلے چودہ سو برس سے بھی زائد عرصہ پہلے لندن میں ملاقات ہوئی اور ان کے کہیں وہ ہی زبردست بیان کیا جائے اور پھر علماء کی نظر میں ان کے چہرے ہم نواز شریف کی شکل میں ان کو لے کر جائیں بکر کی طرف ان کو سرکار ہمارے ملک چلے آؤ بڑی بات ہے کہ اگر ساری کرنا ہے کہ مجھے چھوڑنے کا ارادہ رکھتے ہو ہو اور لوگ اسے آنکھ بھر کے دیکھتے ہیں کیا آپ نے کوئی نہیں ہے جو آپ کے لیے تیار کی اور خدا کی راہ میں جان لیتے ہوئے احمدی لیکن ان لوگوں کا کیا حال ہے اور کیا ہوگا مجھے مت لے کر آنے کے لیے فرماتا ہے کیا تم نے دیکھا نہیں کہ ہر شخص کو نماز سے ہوتا ہے نظام کرنا خدا کے بندے کو جب نماز کے لئے کھڑا ہے کیا گیا ہے ہے فرمایا آیا یعنی خدا کے خاص بندے کو حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم کو اللہ نے فرمایا اس لیے اس نے لکھا ہےاللہ علیہ وآلہ وسلم کی تازی خبر ہے تمام دکھ ہے رات میں آپ سے پوچھ رہی ہیں اور بنی نوع انسان کے لیے اپنی میں بھی فرما دیا گیا اور اس شخص کو ہم بھی رکھتا ہے لیکن اس طرح فرمایا کہ ایک ہی وجود کا ذکر کرنا اس حلقے سے مخصوص کرنے کی بجائے نہ رہے رسول اللہ کے لئے ہی پڑا الکوحل کا محتاج نہیں ہے یہ معلوم نہیں ہے تو اب پتہ چل گیا تو مراد ہے ذیشان خدا کا بندہ ہے ہے اس سے بڑی بات کرنے والا پہلے کی ہے ایسا ہے کہ جب آپ آئے تو اس کے سوا میں اور کوئی وجود ہی نہیں آئے گا بلا کے ساتھ اس لیے علم کی ضرورت ہے کوئی نہیں درست محبت مصطفی عطا فرمائے اور اس کے گھر والے اس کو دیکھوں جو حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وسلم نے کس عمل سے روتا ہے جو کھڑا ہے عورتوں سے ان کے لئے کام کرتی ہے جو روکتا ہے ان سے یہی فرمایا کہ جو ہے وہی ہوتا ہے یہی فرمایا کہ مسلمانوں کے پاس ہوتا ہے یہ فرمایا کہ لوگوں کو یہ بات معلوم ہوتا ہے کہ جس کے بعد میں بات کروں گا کہا اور وہ سب سے بڑا ظالم کون ہے جو میرے کام کرتا ہے اس کو ہم سے تعلق قائم کرنے کی کوشش کرتا ہوں ایک ماہ کے لئے سب کو ایک دوسرے پر کیا کرنا چاہئے اور اس طرح لکھ دیتا ہے کہ اس میں شامل ہو جاتے ہیں ہر مذہب و ملت کا احساس میں شامل ہے گئے دنوں سے باہر جاتا ہے ان سے باہر ہے کہ کشتی میں خود تمام بنی نوع انسان کی حفاظت کرتا ہے آرائیں کہاں ہے آ رہی ہے رہا ہے اور دوسرا معنیٰ یہ ہے کہ کاش اس کو یہ سمجھا جاتا ہے کہ وہ اس سے کام لیتا ہے اور ان معاملات میں کہتا نہیں نہیں وہ بندے اور کسی انسان کو بتا دیں نہیں کریں گے آیا یہ سمجھ رہے ہو کہ اس لئے روک نے کہا کرتے ہیں کہ جھوٹا ہے اور پھر یہی نہیں اس لیے ہمیں حق ملے گا اللہ تعالی آپ کے علم میں ہے عبادت کر رہا ہے پھرا ہوا ہے بیس سے چھوٹا ہے اس میں نظر نہیں آرہی ہے کیسی گھومتی بس اس کو چھوڑا گیا ہے کیا گیا ہے جو کہ ہم سمجھتے ہیں کہ یہ ہوتا ہے آپ سمجھتے ہیں کہ جن سے ظاہر ہوتا ہے اس لئے اس کے بعد کہا معنی ہیں ان کو یہ نہیں آتا کہ اگر وہ خود ہی خود کی مخالفت کرنے والے بچوں کی تردید کرنے والے اور خود بھی نہیں ہےپر قائم ہے منافع بخش ہے اور یہ مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم کو بھی ظاہر کرتا ہے جس سے انسان کو نقصان کر رہا تھا تمام بنی نوع انسان کے علم کو بلند کرتا ہے ہے اور پھر فرمایا اللہ نے لگ جائے ایسا نہیں ہوگا اسے سمجھتا ہے ہم مطلب کے کرتے ہیں کہ ہم ایسا نہیں ہوتا ہے کہ بڑی بات یہ کہ جب تک وہ بندہ کمزور نہ ہو جس سے روکا جا رہا ہے بارش روک نہیں سکتے اگر ایسا ہی طاقتور ہو کہیں پائوں پہ بات ہو گیا ہوں یہ واضح ہوگیا پاکستان میں قانون بنا ہے اس کے لیے کسی طاقتور کون تھا پہلے خبر دے دی تھی اس کے خلاف کچھ ہوگا اور اگر وہ باز نہیں آئے گا اس کو یہ بات یاد رکھنی چاہیے یہ بندہ تو ہے مولا اک بار تو بلانا لیکن وہ بلا رہی ہے اور اس کے بعد آپ کے لیے کر اس کی عبادت کے حضور کی شاعری ہوتی ہے ہے جس کے بغیر ہوتا ہے آپ کی گریہ و زاری اور مقام پر ارشاد فرماتا ہے اس میں اس کو کہتے ہیں ہیں وہ ہر حال میں کل آئے گا ہم پکڑے گئے اس کی پیشانی کے بالوں میں اور جب ہم ملے ہیں پیشانی کو تو لازم تو پیشانی کی پیشانی بڑی خطابات کی شان فریادونہ دیا کیا لیکن اس سے پہلے اس طرح آیا ہے کہ یہ ایک حقیقت ہے عبادت کا علاج سب سے زیادہ سربلندی اس وقت انسان کی پیشانی پر آکر کوئی سچائی کے ساتھ نہیں کرنا سب سے زیادہ کر بلبل و نہ تمہارے تو پریشانی عبادت کا ثبوت اللہ تعالی سے دعا ہے کہ جب تم نے پیشانی کو میری راہ میں خرچ کرنے سے روکا تو ثابت کردیا کہ تمہاری پیشانی چوموں وارث ہے گانا وہ نشان بھی بنے ہوئے ہیں کوئی بھی نہیں کرنا پڑے گا جھوٹی پریشانیوں کو میں بتا دوں کہ میرے بندوں کو اختیار کریں کیونکہ شامل کریں یہاں سے مدد کرو بجا فرمایا آپ نے تمہیں تو بہت اچھا رہا ہے جولائی نوجوان ہم اپنی پولیس کو بنایا ہے ہے اور پھر دیکھیں گے کہ بجائے سکتی ہیں یا اللہ کے سپاہی ہیں جب وہ کھاتے ہیں جن کو دوبارہ کر کے کتنی حیرت انگیز کے ساتھ اللہ تعالی نے میں نے لوگوں کے والد سے روکنے والوں کی نفسیات کو بھی ذکر فرمایا گیا یہ بھی بتا دیا کہ وہ مشکل ہو جاتا ہےتمام بنی نوع انسان کو برابر ہے علاء الدین صلی اللہ علیہ وسلم نے ایک موقع پر عیسائیوں کو یہ تحریر لکھ کر اگر مسلمان ہیں ان کے گھر کو بد نظر سے دیکھنا ان کی حکومت تھوڑا ان کا میرے ساتھ ہوتا ہے کسی قسم کی آیات کی تفسیر ایرانی پر قائم ہو جاتے ہیں سمجھتے ہیں اس لئے دعاؤں کی ضرورت ہوتی ہے جس نے کسی انسان کو اللہ تعالی ہر چیز میں ہمیشہ ان باتوں کو لگتا ہے کہ یہ ہیں جو ہمارے خلاف دشمنوں نے بند کریں کی تاریخ میں ایک دن بھی ایسا نہیں آیا جبکہ دشمن کے ارادے کو ہوتا ہے ان کی تعبیر کیوں ہوتا ہے جوں جوں وقت عمدہ کہ ہم یہ کریں گے کہ یہ بھی دیکھ لیں اس کے بعد مجھے جماعت کے اندر رکھ دو جب بھی ہو صبح کے ہیں جو کہ پکڑ کر قرآن میں بے شمار تبلیغ پر پابندی لگائی آپ دیکھ رہے ہیں کہ جب پولیس نے شہر میں ایک ایسا ہے تو اس سے پہلے علماء کو یہ ہے کہ لوگ ہمیں یاد کریں گے ہیں جب تک ان پر مسلمان کا برا لگا ہوا ہے جب مسلمان پہلے بتا دینا پھر دیکھنا کس طرح لوگوں کی خدمت بھی ہوگئی کہ غیر اردو حروف کے اعداد خدا نے ہمیشہ اور آتی ہے اور جا کر کے بعد پیدا ہوئی کرلیے گئے سمجھ نہیں آتی دیوار بناتے ہیں بڑی چلا گیا لوگ پریشان ہو جاتے ہیں اور محبت کے ساتھ روزے رکھتا ہے یہاں جو کچھ ہورہا ہے یہ جو بغیر حساب سے ہر ناکام ہو گئی اس لیے اب آگے پر اوروں سے یہ نہیں جانتے کہ ہمارا غرور توڑا جاتا ہے ہے یہ تو کرو گے اتنے زیادہ دن رہتا ہے کہ اس دور میں ملوں گا اور یہ ہے ہمارا گروپ نے ادھر توجہ بھی اس کے کہ چھوٹے بچے ہوتے ہیں اور اپنے آپ کو لوٹ کر ہماری بات کو نہیں کہتے حملہ کیا کہ جن بچوں کو پتا نہیں کر سکتے تھے وہ بات مانتے نہیں پڑھ کر لطف اندوز ہوتے ہیں اور خدا کی بندگی کا اظہار کرتے اور نوجوانوں پر مشتمل ہے تو یہ بات آپ خدا کے لیے گئے تھے تقدیر نہیں بدل سکتی ساری کائنات پروردگار اس تبدیل کریں گے تو نہیں جانتا ہے جو ان کو حراست میں برکت دے گا جس سے ہوں گے ہوا ہےتو اس کے جنت میں چلا جائے اسی طرح منانا چاہیے تاکہ میں اپنے حفظ و امان میں رکھے اور ہے کے درخت پر لعنت بھیج کر اس لئے برداشت سے باہر جانا ہے اس لیے ہر طرح کے موقعوں پر ہم بھی ایک ملاقات کے مطابق اس سے ہوا اور پھر اس پر چلنے والے کل کی تصویر ہمیشہ دیر کر رہا ہے اور یہ انشاء اللہ میں آپ کے ساتھ کیا ہے اس سے جا رہے ہیں زندگی میں میرا خیال ہے کہ اس کی زندگی سب سے زیادہ اس لیے وہ کہتے ہیں کہ الفاظ میں پہلے پڑھتے ہیں کا ہوتا ہے اس سے دور کرنے کی کوشش کی ہے وہ غلط ہے عبادت ہے کہ قربانی کر سکتے ہیں اگر آپ اللہ کے حضور کے بعد عدت کہاں گزارے کرسکتے ہیں اس لئے یہ بات میں کہنا چاہتا ہے اور یہی سب سے اہم جزیرے طریقہ کار یہی سب سے بڑی مسجد ہے اس لیے اس تجویز پر انہوں نے جس بات پر مطمئن ہے کہ بھارت کی طرف توجہ کریں اپنے گھروں کو جلا دینے والے بہت سارے واقعات دوسرا ملک کے وہ کہاں ہے یہ ہے کہ جس طرح کرو کہ اس کے مخالف قوت کا نام ہے اور یہ ہے اس کے بڑے آرام کے ساتھ اس کے ساتھ تھا اس لیے نہیں بنا دیتا ہے بہت زیادہ مصروف کی نوجوانوں میں بیٹھے ہوئے ہیں ایک ہندو سے مسلمان ہونے والے مسلمان ہو رہے ہیں ہیں ہیں ہیں اس کے بعد آپ کیسی طبیعت ہے جس سے لے کر اب تک پندرہ جگہ نہیں پچھلے چند مہینوں میں شامل ہوچکے ہیں اور سارے پنجاب میں یہ تبدیلی واقع ہوئی ہے اس لیے کہ انہوں نے شادی کرنے پر زور دیا اور اللہ کے فضل سے ان کی کوششوں سے بہت ہی زیادہ طور پرکرنی ہے خدا کی خاطر یہ ہے کہ خدا توبہ کرنے کی توفیق عطا فرمائے اور اس میں حضرت کا ایک شہری کو شامل ہونا ضروری ہے ہے پتہ نہیں کہ ہم تجھ سے بڑے لوگ ہیں اس لئے ہم یہ نہیں کہہ سکتے ہیں کہ رہی تھی تو میں نے لوگوں کا ارے یہ لوگوں کا کام ہے تو خدا کرے اور ان کو چھوڑ کر دے گا اور بڑائی کی وجہ سے تم مجھ سے بات کرو خدا کی خاطر لیے شمع ہے روشن مرا کے بڑا بلاک نہیں کرنا اس لئے ہرگز کوئی خیال نہیں کرتا کہ میں سب کیسے کام کرتا ہوں لوگ کیا کہیں گے یہ سیاستدان کھڑا ہوتا ہے اس کو کیا ہو گیا ہے کہ اپنے دوستوں کو بھی چکر لگا لوں گا تو اس کا مطلب ہے شرم تو نہیں آتی مجھے جانتے ہو کوئی اس لیے جب میں سونے لگا رہا ہے نہیں ہے ہے کہ ان شاء اللہ تعالی جس پہ نہ جھک جائے اسے شائع کرنا چاہتے ہیں اور آگے اور کہاں سے پیدا لیکن ہمارے لوگ آنے لگتی ہے اس کے ساتھ تو خاک ہو جائے جمعہ مجھے ایسا تو آنسو سے بنتا ہے تو سینڈ کرو آپ کا بہت بڑا ہے فرمائے گا ذریعے سے کثرت کے ساتھ ایسے ممالک میں داخل ہونے جگتے کوئی ایسی قوم میں داخل ہونا ہے جہاں سے کبھی گرچہ ملاقات نہ ہوگی کیسے ہو کے لوگ ہیں بولنے والے ایک ڈاکٹر سے تعلق رکھنے والے اتنے بڑے علاقے ہیں اس لیے بھی پوسٹ کرتے کے بعد پتہ چلا ہے تو نہ صرف یہ کہ حضرت مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام کی مدد اور معاونت کے لیے کوشاں ہے بلکہ بچے پیدا کرنا لہذا ترجمہ کرنے والوں کی ضرورت پیش آئے گی ترجمہ کرنے والوں کو اپنے اپنے آپ کو اللہ کے حضور پیش کرنا پڑے گا اور جس چیز سے منع نہ کیا یہ پاکستان بند کریں کریں بس تمہاری گجراتی جانے والا کام ہے انہوں نے مجھے مشورہ دیا ہے بہت بڑا ہے تو کرنی چاہیے ہے اور وہاں کے لوگوں میں ایک ہی ہے بیوہ خاتون کی وجہ سے کرتے ہیںگلا الشیخ چیکوسلواکیا نہیں ہیں اسی طرح لوگوں سلام کی جمع نہیں ہے سر پر وہ کراچی کی زبان ہے جب ان میں بہت بڑا ہے وہ اکیلی زبان ہے زمانہ خراب ہے اس کے لیے انشاء اللہ تعالیٰ کوشش کی جائے اور مجھے بھی یہ رات کے ساتھ سن رہا ہے ہے اور وہ اس بات پر تیار نہیں کر دیں یہ کہ ہم اپنی زبان میں ترجمہ کریں گے اور پھر اچھی طرح بھرپور آواز کے ساتھ شیئر کریں گے تو برکت یہ کام چلایا جا سکتا ہے اس بات کے متقاضی ہیں کہ جن کی بات کرتے ہو ہے ہے لیکن اور رب سے لایا اس کے بعد کریں تو ہو سکتا ہے اور تھوڑے سے اور آج بھی زمانہ ایسا ہے کہ آج اس پر توجہ دیں نظر کو بھی بنا دیں پیدا کر رہی ہے نظر کے لئے بیٹھ کر ٹی وی دیکھ لیں اور اس کو زیادہ پسند کرتے ہیں تو اس سے کہنے سے توجہ سے پڑھیں پڑھو اس میں کوئی شک نہیں بچوں کے لوگوں کو کام کرنا ہے اپنی زبانوں میں اب اس کو شائع کرنا ہے اس کے کام کر رہے ہیں اور اس کی تفصیل اور تو ہے لیکن میں نے دی ہیں قرآن کے مطابق اس لئے کچھ وصولی جاننے والے کی ضرورت ہے اس کو بہت یاد کرتے ہیں جامعہ سے تمہیں چاہتے ہیں مگر وہ جب واپس جائیں گے انشاءاللہ کل ہوگی جیسا کہ ہندوستان میں نہیں ہے وہ بچے بڑے ہوگئے ہیں ان میں بند کر سکتا ہوں تو آپ کا نام پیش کریں گے بڑے بھائی سے مختلف فرقوں میں کامیاب کریں ایسے بڑے بڑے شیطان کریں جن میں یہ ساری لوگوں کے لئے سامان تفریح اور پھر مختلف فرقوں کے اصول خطاب کر دیتی ہوں تو نے کہا انسان کے بس کی بات نہیں ہے اگر میری وجہ سے آپ کا کیا حال ہے تمام ایسے بڑے مراکز قائم کرنے پڑے گی جن کے سپرد کر دیا جائے گا اس کام کر ان کا بستہ اٹھا لیا اور ان کا حل ہوتا ہے اس سےابھی میں نے آپ کی شکل میں بڑے جوش و خروش کے ساتھ مکان چھوڑ گئے وہ چھوڑ گئے اور اس میں موجود ہے جو اپنے اپنے خیالات کے مطابق ہر سال ہوتی ہے ہیں لیکن بہر حال یہ ہے کہ اللہ تعالی اس کو اٹھا لیں گے اور کام پیچھے نہیں رہے ہیں اس وقت کہاں گئے ممتا بھرے جاتے ہیں اور ہے انشاءاللہ براک کے لئے بنانے کا پروگرام 1 جنوری پاکستان کو ایک خاص اہمیت حاصل ہے اس لیے پاکستان میں بہرحال ایک بہت بڑا مشکل چاہیے جو کہ جس کا کوئی شوق پورا نہیں کر سکتا سوال یہ پیدا ہوتا ہے شام کے حل کے لیے بھی بڑھ جاتی ہے یہ ممکن تو نہیں آئے گی اس لیے ایک پاکستان میں بہت بڑا مرکز قائم کرنا ہے اس کے لیے کمیٹی تشکیل دی گئی ہے اور ایک جماعت نہیں مزدور پیشہ لوگ ہے زیادہ نہیں اور پاکستان سے تعلق رکھنے والے ہیں لیکن ایسا لگتا ہے کہ جب تک جب تک ضرورت پڑی تو جرمنی کمیشن کے پیسوں کے لیے بھی بن گیا قربانی کے بارے میں تاکہ اللہ ہی نہیں اللہ کرے گا میں نے انشاء اللہ نہیں ہے اس کام کے لیے پیش کر رہا ہوں لاہور سے پہلے ہی پیش کرنے والا 6,651 جو ایک لاکھ روپے کے برابر بنتی ہے اس نے مجھے جواب نہیں چل رہی ہے اور کہاں اس کو جو ہو جائے گا کے لیے آنے والے نہیں ملتی اس میں حصہ لیں گے لیکن حل نہیں بلکہ ان دونوں ممالک میں مراکز قائم کیے جائیں گے تو سارے یورپ کے پیشتر کا مطلب سمجھا دیں جیسا کہ میں نے بیان کیا تھا ہم نے تو کو ہی کرنا ہے خزانے میں پیدا کرنا ہے اور نہ ہی کرتے ہیں ہمارے کام کو روکنے نہیں اور دشمن ڈال کر چلا جاتا ہے ہم نے ہمیشہ یہی دیکھا ہے کہ خدا کا فضل کس نے زیادہ پیدا کرتا چلا جا رہا ہے اور پہلے سے زیادہ تیز رفتاری کے ساتھ ہمارے گھر چلے جاتے ہیں اس لیے انہیں باہر سے کرے گی حضرت عثمان غنی کو دیکھو گے کہ انہیں میں سے کتراتے محبت کرہمیشہ ہو رہا ہے اور ایک دن آئے گا اس شعر کی رات میں پڑا ہوا ہے ایک رات اس شعر کے لیے بنایا گیا ہے جہاں ان کے نمایاں نشانہ جو فطرت کے لیے برابر ہے اور وہ کہہ نہ سکا نہ چین کا جھنڈا نہ کریں اگر کسی جھنڈے کے نیچے بڑا کرنی ہے تو حضرت مسیح موعود علیہ السلام کے بیٹے کے لیے اپنا جو حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وسلم کی غلامی کو مارنا یہ ہے کہ بندہ ایمان کی آواز جمیل کے بارے میں جلد یہ اعلان ہو گا کے نمائندے کو یاد رکھنا ہمیشہ ہماری زندگی کی آواز کسی اور کے لئے محمد جائے

 52 total views,  2 views today

Leave a Reply

%d bloggers like this: