بد باطن جھوٹے مولویوں کے ایک گھناونے اعتراض کا جواب




بد باطن جھوٹے مولویوں کے ایک گھناونے اعتراض کا جواب

Streamed live on Aug 3, 2021

احمد اللہ وبرکاتہ ارشد ولا الہ الا اللہ وحدہ سولا شریک لہ اللہ محمد الرسول اللہ اما بعد فاعوذ باللہ من الشیطٰن الرجیم بسم اللہ الرحمن الرحیم دینے کا نام مربی سلسلہ خاندانی آج آپ کی خدمت میں جماعت احمدیہ کی مرکزی ویب سائٹ www.islam.com سے ہمارا یہ جو روزانہ پروگرام آتا ہے اس کے نام اردو اس کی کوشش کریں کہ آپ کی خدمت میں حاضر ہوا ہے جیسا کہ آپ جانتے ہیں ہم اس پروگرام کے دوران یہ ہمارا جو ہے وہ تیس سے چالیس میں دعا کرتا ہے اس کے اول ایسے میں ہم جماعت کی جو مرکزی ویب سائٹ ہے ہے اس سے کچھ نہ کچھ دنوں بعد آپ کی خدمت میں پیش کرتے ہیں کوئی نہ کوئی تعارف یا کسی موضوع پر گفتگو آپ کے ساتھ ہوتی ہے اور اس کے بعد جو آپ کی طرف سے ہمیں لائک سوالات موصول ہو رہے ہوتے ہیں بعض علاقوں میں بھی مل جاتی ہیں ہم ان کا جواب یہاں پر لائیو آپ کے اس پروگرام میں ہم آپ کی خدمت میں پیش کرتے ہیں کیونکہ ہمارا یہ پروگرام صرف تیس سے چالیس منٹ کا دورانیہ ہوتا ہے ممکن ہے کہ بعض دوستوں کے سوالات و کی کمی کی وجہ سے ہم اس اپیسوڈ میں نہ لے سکیں ان دوستوں سے شروع ہی میں خاطرات معذرت کرتا ہے لیکن جیسے کہ اب سکرین پر ہمارا ایمیل ایڈریس اردو اسٹیٹس الاسلام download آپ اگر کوئی سوال رہ جائے آج کے پروگرام میں لیے جانے سے آپ بے شک میں ای میل کرنے ہیں میں آپ کے سوال کا جواب دے دیں گے ورنہ جیسا کہ بتایا یہ پروگرام ہفتے کی چھٹی نہ صرف جمعہ کو چھوڑ کے باقی چھ دن پروگرام کرتا ہے آپ کو جب موقع ملا آپ اپنے سوال جو ہیں وہ پیش کر سکتے ہیں ہیں ہیں ایک جو آج کا ہمارا موضوع ہے اس کے بارے میں آپ سے خاکسار آج سے کچھ بات کرنا چاہتا ہے موجوں جو ایک اعتراض ایک ایسا اعتراض جو مولوی حضرات کرتے ہیں اور نہایت گھرانہ اعتراض کرتے ہیں میں اس اعتراض کی ڈیٹیل میں نہیں جاتا لیکن جو ہیں ان کی ایک عادت ثانیہ بن چکی ہے کہ وہ جھوٹ بولتے ہیں اور جھوٹ بولتے ہوئے بالکل بھی شرم نہیں کرتے شریعت محمدی امی صلی اللہ علیہ وسلم اسلام نے قرآن کی تعلیمات کے مطابق تیسرا بڑا گناہ اسلام میں جھوٹ ہے ہے ایک دفعہ رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم کی طبیعت خراب تھی غالبا آپ صلی اللہ وسلم کو بخار تھا آپ آئے ہوئے تھے آپ کے پاس اب آپ کے پاس موجود تھے آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے اس موقع کو بھی نصیحت کا ایک رنگ دینے کے لیے آپ نے اپنے اصحاب کو فرمایا کہ دیکھو سب سے بڑا گناہ خدا تعالی کے ساتھ کسی کو شریک ٹھہرانا ہے یعنی شرک نہیں کرنا دوسرا بڑا گناہ والدین کی نافرمانی حقوق الوالیدین والدین کی نافرمانی نہیں کی اگر والدین مشرک ہیں یا والدین اگر دین سے دین کے خلاف کوئی کام کرنے کو کہتے ہیں تو اس وقت ان کی نافرمانی نہیں کرنی نافرمانی والدین کی تگ نہیں بنتی ہے جب دین کے علاوہ کسی بات میں وہ کوئی کی کوئی بات کہی اور انسان اس وقت ان کی نافرمانی کرےسے رسول پاک صلی وسلم کی دشمنی کرنا ہی اپنے نصیب میں لکھ چھوڑی یا ان کا کوئی عمل رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم کی سنت کے مطابق نہیں دکھائی دیتا اسی قسم کی حرکات میں فرق ہے مولویان ایک قسم کا اعتراض جو جماعت احمدیہ کے موجودہ خلیفہ حضرت خلیفۃ المسیح الخامس ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی ذات پر لگاتی ہے کہ تین کے جی حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کو جب حضور پاکستان میں تھے غالبا بنانے کی بات ہے تو اس وقت ایک مقدمہ دوران ملکی پروازوں کے ذریعے اس وقت پاکستان میں نظریاتی جماعت تھے تو تو اس وقت جب مولویوں نے کیا کیا تو اس وقت کوئی وجہ تھی اب جو اس دور میں انہوں نے جھوٹ بولا جنہوں نے جن والی حضرات نے کہا کیا انہوں نے جھوٹ بولے اور آج جو انہیں کے چلے ہیں ان کے بھائی بند ہیں ان کے ہمراہ نہیں ملی ہے اب وہ کسی قسم کے گندے اعتراضات جو ہم کرتے ہیں سو ان کی گندی ذہنیت اور گندے اعتراضات کو پیش کرنے کی ضرورت نہیں لیکن یہاں پر حقائق آپ کے سامنے پیش کرنا ہمارا مسئلہ ہے وہ میں اب آپ کی خدمت میں پیش کرتا ہوں کہ اس وقت ہماری جماعت کی جنازہ اعلی ہے ان کو کیوں گرفتار کیا گیا تھا اب آپ کی خدمت میں آنے لگا ہے ڈاکومنٹری کا حصہ دکھانے لگا ہے جس میں اس بات پر روشنی ڈالی گئی ہے کہ حقائق اس کے کیا تھے زیادہ چند منٹ میں آپ کے سامنے اس سے کچھ عرصہ پہلے کروں گا مون لائٹ تھی اس نفسیات میں سروے مدینۃ حنیذ ان النفس لیگ یا منظور چنیوٹی تبدیل کرو سارے ملک میں تقسیم کیے تبدیل کر دیا جائے اس لئے کہ رب کا لفظ قرآن کریم میں مذکور ہے اور ان کو حق نہیں کہ الفاظ جو قرآن میں استعمال ہوئے ہیں یہ اپنی کسی خلافت کے لئے استعمال میں لائیںکی تو ان کے خیال میں ساتھ لے گئے الزام دیں یہاں ہوں گے کوئی گلہ کریں گے جب ان کی اٹھا کر پھینک دیا اور الزام ہمیں چھوڑ رہا ہم سب کے گئے یا مذکورہ نے گھر کا گھر کے بتانے کے لئےاور مسلک کے نام سورہ رحمنیہ 935 ہیڈ آفس نوحہ بی بی نے ابی بن خلف کربلا کوئی تو یاد ہے کہ ہمارے عزیز آئے مجھے قادری کی شہادت ہو چکی تھی تو انہوں نے کل کے گروپ میں پوسٹ نہیں ہوتی ہے وہ کہہ رہے ہیں کہ مورخہ گڑ اور شکر ہے تو کہتے ہیں پہلے تو ہم یہ نہیں قانون کی کتاب میں نہیں ہے گئے تھے ابھی دوسرے بھی ان کے پاس اسلحہ تھا کر ان کا خیال یہ تھا کہ زمانہ بدل لیتے ہیں تو یہ فارغ ہوگی ایسے حالات تھے کیا کیا کہ نام پولیس کی گاڑی والا کرکٹ کے ساتھ لگا دی عدالت کی عرضی کے ساتھ تھا زمانت کینسل کر دیں میں مندر میں صاحب کے پیچھے کھڑا ہوا تھا تو خواجہ صاحب گھر آئے کیونکہ ایک آدمی کے ذہن میں نہیں تھا کہ یہ صورت بھی ہوسکتی ہے تو انہوں نے کامیابی حاصل کی جائے تو میاں صاحب نے میری طرف دیکھا اور فرمایا ان کو بتا دوں کہ ہم بھاگنے والے نہیں ہیں تو پھر ہم باہر نکلے پر آکے مجھے اور اکبر صاحب آپ اپنا فرض پورا کریںخاص آپریشن ہے فل سو سی سی عبدالرحمن سدیس کی نماز اپنی پوری طرح جذب کر کے پڑھتے تھے ایک دن پہلے سے جس دن ہم ہوئے ہیں تو جمعہ ہم نے یہاں نہروں میں تھا مجرم سے زیادہ صاحب نے فرمایا کہ جو پڑھائی نہیں نظر خان شمس تبرز مضامین میں جیسا کہ آپ نے دیکھا کہ اس ڈاکومنٹری میں اور یہ اس ڈاکومنٹری کا لنک ہے یہ پیٹ میں شادی کر رہا ہے اور بعد میں جو اس ویڈیو کو دیکھیں گے ان کے لئے اس ڈاکومنٹری سپلنگ ڈسکرپشن میں بھی لگا دیں گے تاکہ اس ڈاکومنٹری کو پوری تفصیل کے ساتھ مکمل آٹومیٹڈ سکے اور تمام حقائق آپ کے سامنے آجائے آئے یہ ڈاکومنٹری کا جو حصہ تھا آپ کو اس لئے دکھایا ہے تاکہ وہ حضرات جو بندے اعتراضات کرتے ہیں جھوٹ پر مبنی اعتراض کرتے ہیں مولویوں سے جھوٹ کر آگے سوشل میڈیا پر یا ادھر ادھر کے سامنے کہتے ہیں کہ دیں یہ حقیقت ہے یا وہ کتی کے لیے یہ ویڈیو تیار کی گئی ہے تاکہ اس ویڈیو کے ذریعے حقائق ہر اس شخص تک پہنچائی جا سکیں جوواقعتا حقیقت کا متلاشی ہے جو چاہتا ہے کہ سچی بات اس کے سامنے ہیں آج کے پروگرام کا یہ حصہ تھا جو آپ کی خدمت میں ہم نے پیش کرنا تھا اب آپ کے سوالات پاگل ہیں ہم ان کو جی آپ کی طرف سے جو پیغام اٹھارہ میں موصول ہو رہے ہیں اور جو سوالات آ رہی ہیں ان کی طرف چلتے ہیں کہ دوستوں کی طرف سے السلام علیکم بھائی آپ سب کو وعلیکم السلام آپ کی کمی کی وجہ سے خاکسار فردن فردن آپ سب کا کام تو نہیں لے سکتا اور اسی وجہ سے جو ہے سوال آیا ہے کہ جماعت احمدیہ کا علامہ ڈاکٹر علامہ اقبال کے بارے میں جماعت احمدیہ کا کیا موقف ہے آپ علامہ اقبال کے والے جوہیں وہ ہم بھی تھے علامہ اقبال بھی ہم بھی تھے پھر انہوں نے بعض اختلافات کی وجہ سے جو سیاسی کلچر کے تھے انہوں نے جماعت سے علیحدگی اختیار کر لی اور ان سے ان کی نسل ہے کتنے بجے وہ عالم دین ہیں لیکن ان کے خاندان کے لیے ہیں ان کے خاندان کے دوسرے افراد تھے ان میں ابھی جو ہے وہ اللہ کے فضل سے دیتا ہے ہے ہے اور سوالات عربی اور یہی سوال ہے کہ یہ صحابی کی کیا صحابی کیا ہے ڈیٹیل بتا دیں صحابی کو کہتے ہیں جو اپنے وقت کے نبی کے اوپر ایمان لے آئے اس کی زندگی میں اس کو صحابی کہتے ہیں صحابی کا لفظ محبت پہ بھی نکلا ہے جس کا مطلب ہوتا ہے کسی کی ہمسائیگی تیار کرنا یا یہ کہ کسی کا قرب حاصل کرنا تو اس سے ایک روپیہ بھی نہیں جاتی ہے کہ ابھی اس شخص کو کہتے ہیں جو نبی کی پر ایمان لائے اس کی زندگی میں اور اس کا قرب کو دیکھا وہ ملا لامیرے لائسنس آفس near جی پروگرام کو بہت پسند آتا ہے اور وہ تمام کیلئے دعا گو ہیں جزاک اللہ احسن الجزاء رضا اسی طرح عبدالحمید صاحب ہیں آپ کا بھی پیغام مل گیا جزاک اللہ جی جی آیا ہے اسلام میں عورتوں کو وراثت میں آدھا حصہ اسلام میں عورتوں کو وراثت میں آدھا حصہ دیا گیا ہے ایسا کیوں ہے بات یہ ہے کہ مرد کے اوپر اللہ تعالی نے ایڈ ذمہ داری ڈالی ہے اللہ تعالی نے نظام مرتب فرمایا کہ یہ تمام ہے اور تمام ہونے کی دو وجوہات بیان کی ایک جسمانی کے جسمانی طور پر مرجائے وہ زیادہ طاقتور ہوتا ہے اس کی وجہ سے اس کی ذمہ داری لگائی کے وہی ہوں جو باہر جاکے روزی روٹی کمانے اور گھر لے کر آئے اور اسے گھر چلے تو مرد کے اوپر بیوی اور بچوں کا نان و نفقہ کا جو خرچہ ہوتا ہے وہ اللہ تعالی نے مار ڈالا اس کے والدین ہیں اور کوئی اور بہن بھائی نہیں تو ان والدین کی بھی بزرگ والدین کی ذمہ داری اس مرتبہ آ جاتی ہے لہذا ان کا خرچہ بھی انسان ہے تو مت کیونکہ فائنل ذمہ داری زیادہ ہے اس وجہ سے مرد کا حصہ عورت کی نسبت زیادہ رکھا گیا لیکن اگر حقائق کو دیکھا جائے جو صورت حال ہے جو ریٹ یادگار محفل ہے اس کو دیکھا جائے تو عورت کے حصے میں ترقی کا جمال آتا ہے وہ زیادہ ہو جاتا ہے اس کی وجہ یہ ہے کہ عورت کا مال شریعت اسلامیہ میں عورت ہیں چاہے اس کے اوپر اس کے مرد کی جو ہے وہ کوئی تو عورت نوکری کر سکتی ہے یا اس کی کوئی قیمت ہے تو اس کے اوپر کمپلیٹ ان سے پوچھ لیجئے گا تو اس میں عورت کی بھی اس طرح کی آزادی اس میں عورت کی جوانی چھپاو گی اور اگر مرد نوکری کرتا ہے تو وہ سارے پیسے ہیں وہ بھی گھر آتے ہیں اور اس نے بھی عورت جو ہے اس کے پاس گیا لیکن عورت کی نہ ملتی ہے کہ ان کے پاس آتا اسے آ سکتی ہے اس میں پھنس کر سکتی ہے تو اس لحاظ سے اگر آپ کے میتھ کریں گے کہ اگر ایک بندے کے پاس اتنے پیسے ہیں اور اس کی اگلی نسل میں تقسیم ہوتا ہے تو وہ بظاہر لگتا یوں ہے کہ جیسے بیٹے کے پاس زیادہ جا رہا ہے لیکن جب وہ خرچ دیکھیں جو خرچ ہوتے ہیں کہ بیٹے نے اپنی بیوی بچوں کے لیے بھی کرنا ہے پھر اپنے والدین کے لئے بھی کرنا ہے اور دوسری طرف بیٹی جو ہے بیٹیوں پر کسی قسم کی کوئی ذمہ داری نہیں تو خود یہ بات واضح طور پر ہو جاتی ہے کہ گو بظاہر عورت کا حصہ کم ہے لیکن انڈے دن کے آخر پر عورت کے پاس زیادہ پیسے لے جاتے ہیں ممکن ہے اور اس کی وجہ یہ ہے کہ مردے اللہ تعالی نے اپنی نسل کی ذمہ داریاں ڈالیں اس وجہ سے سے سے سے سے سوال آئے گی محرم اور نا محرم رشتوں کے بارے میں وضاحت کرکے رہنمائی کردیں کہ جن کے سامنے اگر دوپٹہ پاس نہ ہو تو گناہ نہیں ہوتا اس ضمن میں خان صاحب نے پہلے بھی ایک پروگرام ہے اس کی تفصیل کے ساتھ جواب دیا ہے وہاں سے آپ اس کا جواب ہے وہ آپ حاصل کر سکتے ہیں بنیادی طور پر یہ بتاتا چلوں کہ سورہ النور کی آیت نمبر 32 میں ان رشتہ داروں کا اللہ تعالی نے جن سے پردہ کیا جاتا ہے ان کا ذکر اللہ تعالی نے وعدہ کیا ہے اس کے علاوہ سورہ نساء میں بھی غالبا سورہ نساء آیہ حجاب اللہ تعالی نے قرآن میں فرشتوں کا ذکر کیا کہ کتنا چاہتی ہو سکتی ہے کہ ان کے ساتھ شادیاں نہیں ہوسکی آیت میں اللہ تعالی نے بھارت کے ساتھ بتائیں کہ کس کس نے پیدا کرنے کے سامنے پردہ کرنے کی ضرورت نہیں ہے تو اسے آپ اگر وہ آیت پڑھ لے تو اس میں وہ تمام بیان کر دی ہیں جن کے بارے میں آپ کا سوال ہے ہےبار ثبوت بھی آپ کے اوپر ہے اگر آپ کو لگتا ہے کہ جماعت احمدیہ کی کوئی ایسی بات ہے جو اسلام سے دور ہے یا اسلام کے مطابق نہیں ہے تو لے کر رہے آپ اپنا حوالہ پیش کرے ہم اس کا جواب نہیں لیکن تہذیب کے دائرے میں رہ کر بات کریں اگر آپ تہذیب کے دائرے میں رہ کے ہمارے امام کے بارے میں بات کریں گے تو تہذیب کے دائرے میں رہتے ہیں آپ کی بات ضرور جواب ہے لیکن اگر آپ گالی گلوچ کریں گے یہاں پہ آ کے تو پھر یہ بات نہیں اس میں ہمارے لئے لازم ہیں کہ پھر ہم آپ کے سوالات کے جواب دیں کی باتیں کہتے ہیں کہ مرزا صاحب نے یہ حضرت اقدس مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام نے خدا ہونے کا دعوی نہیں کیا کیا حوالہ دینا فتوی دینے والا حضرت مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام نے ایک جگہ بھی خدا ہونے کا دعویٰ نہیں کیا آپ مولوی حضرات آپ کو جو پڑھاتے ہیں اور صاف کانٹیکٹ بات آپ کے سامنے لے کر آتے ہیں جن کو آپ استرا ترا ہر سال سمجھ کے کھا رہے ہوتے ہیں جس طرح مولوی آپ کے مولوی حلف اٹھاتے تو یہ بات بھی ٹھیک نہیں اگر آپ دعا کریں ہیں تو پھر حوالہ لے کر آنے والے کے ساتھ بات کریں آپ کے سوالات کا اعتراض کا یہاں پر ہم جواب نہیں دیتے صاحب آپ کا سوال مل گیا ہے بعض حالات ایسے ہوتے ہیں کہ جن کو حیا کی وجہ سے اس طرح پبلک کا پلیٹ فارم پر ان کے جوابات اس سے نہیں دیے جاتے اگر آپ مناسب سمجھیں تو ہمیں ای میل کر دیں انشاء اللہ تعالی آپ کو ای میل کے اوپر آپ کے سوال کا جواب دے دیا جائے گا گا گا گا ایم آئی ڈی سے سکرین پر آپ دیکھ سکتے ہیں ہیں ہیں دی یہ سوال مفتی سلسلہ جماعت یا مولانا مبشر احمد کاہلوں کی خدمت میں بھی پیش ہوا تھا جماعت کا جو ایم پی اے کا پروگرام بتائیں کہ مسائل کا حل کیا تھا کہ اگر تو اس نیت سے انسان قومی بچت کے جو پڑھتے ہیں ان میں رقم جمع کرواتا ہے کہ بدلے میں اس کو کچھ رقم ملے تو اسی کا نام سود ہے اسی کو کہتے ہیں چاہے وہ حکومت کی طرف سے جو چاہے وہ کسی کی کسی فرد کی طرف ہو ہاں اگر کوئی رقم جمع کراتے ہیں حکومت کے پیٹ میں اور حکومت بطور انعام خود اپنی طرف سے پوچھا دے دو نام کیا لیکن جب آپ کی نیت یہ ہو کہ اچھا میں نے جمع خرچ سے کترانے تاکہ مجھے اچھا لگتا ہے ملے تو پھر وہاں نہیں ہوتا پھر وہ سود کی صورت اختیار کر جاتا ہے اور سود کا لینا دینا جائز ہے یہ چیز اسلام میں جائز نہیں مزید رہنمائی کے لئے آپ اگر چاہیں تو آپریشن ردالفساد کو ان کا حق بھی لکھ سکتے ہیں وہ ان رائٹنگ آپ کو ختم کر دیں گے سوال ایک جیسی محنت کے بارے میں جماعت احمدیہ کا کیا بھی ہے سوال یہ ہے کہ تم نے نظم کی ڈیفینیشن کیا ہے ہے اگر آپ سے میں نظم کی ڈیفینیشن بتا دیں تو پھر اس کے مطابق میں آپ کو ایڈ کر سکتا ہوں کیونکہ ہر فرد کی ڈیفینیشن فیمنزم کی الگ ہے کوئی شخص اس کی ایکسپینشن کرتے ہیں کوئی اس کی بیوی آپ پر شک کرتی ہیں اگر یہ بتا دیا جائے کہ میں نظم کی ڈیفینیشن سے مراد کیا ہے یہ سب سے مراد کیا ہے تو پھر اس کے مطابق میں آپ کو بتا سکتا ہوں کہ اسلامی تعلیمات کے بارے میں کیا کہتی ہے جو اسلامی تعلیم کے یوں ہیں جمع یہ کا اس بارے میں نظریہ ہے ہے ہے ہے ہے حاجی عبدالرحمن جامی صاحب نے ایک دفعہ نہیں بتائی ہے میری زندگی کی آس رہتی ہے آپ نے یہ ڈیفینیشن بتائی ہے کہ بعض خواتین اپنے کپڑے وغیرہ کو جلا دیتی ہیں اور بغیر لباس کے سڑکوں میں پریڈ وغیرہ کرتی ہیں اگر اس چیز کا نام ہے تو اس چیز کو تو اسلام حیا کے خلاف سمجھتا ہے اللہ تعالی نے فرمایا ہے کہ انسان کو چاہئے کہ اپنے جسم کو ڈھانپ کر رکھیں اور یہ سب تو حضرت آدم علیہ السلام کے دور سے چلتا چلا رہا ہے تو دوبئی اس کے خلاف عمل کرے گا چاہے مرد ہو جائے اور طے ہو اسلام کی تعلیم دیتا ہے کہ یہ کام درست نے آگے سے ملزم کی یہ تعریف ہوگی یہ ڈیفینیشن ویڈیو آپ نے پیش کی ہے تو اس کے بارے میں اسلامی نقطہ نظر میں نے آپ کی خدمت میں رکھ دیا لیکن چونکہ بعض لوگوں کے نزدیک بورڈ آف نیشنز دی ہیں لہذا اگر کوئی ٹینشن ہوگی تو اس کے مطابق تھے آج ہے وہ جواب دیا جائے گاکمنٹس کسر میں نے دیکھے ہیں آپ کے اور جو آپ لوگوں کے سوالات ہی میں ڈھونڈو گے کوئی اور سوالات بھی ہیں تو کمنٹس میں مجھے زیادہ دکھائی دے رہی ہے ہے ہے یہ ایک حوالہ ہے جو عیشہ صدیقہ صاحب نے شیئر کیا ہے خاص کر آپ کی خدمت میں پیش کر دیتا ہے آپ تحریر کرتے ہیں کہ حضرت اقدس مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام فرماتے ہیں کہ اس طرح کی بھی ایک حد ہوتی ہے اور مختلف ہمیشہ غائب خاص رہتا ہے اور یقینا کا مارا ہوا جس نے جھوٹ بولا اور تحقیقی حوالہ ہے ہے مزا جلد سوم صفحہ 543 جزاک اللہ جی کے بارے میں حضرت اقدس مسیح موعود علیہ السلام کا نہایت ہی مؤثر حوالہ آپ نے شرک کیا ہے اور مسیح موعود علیہ السلام نے درحقیقت قرآن پاک کی اس آیت کی تفسیر میں اس بات کو یوں بیان کیا ہے ہے نعمت الباری ناصر صاحب کی طرف سے یہ پیغام آیا ہے آپ کی قیمتیں پروگرام ہے اللہ تعالی آپ کی مساعی قبول فرمائے اور امین کو حق قبول کرنے کی توفیق عطا فرمائے آمین جزاک اللہ و احسن الجزاء ایم ڈی علاءالدین صاحب ہیں وہ کہتے ہیں کہ حضرت مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام کے ساتھ والے بھی صحابی ہیں جن میں شاید آپ کا یہ کہنا مقصود ہے کہ جو ان کے ہمسائے میں رہتے تھے کہ آٹومیٹکلی شادی ہو جائیں گے میں نے صحابی لفظ کے بارے میں بیان کرتے ہوئے یہ بات بیان کی تھی کہ صحبت ایمان کی حالت میں ضروری ہے ورنہ تو کیا ابوجہل تھا وہ اعظم کے ساتھ بھی ہو سکتا ہے کیونکہ وہ آپ کے مسائل میں رہتا تھا یا اس سے آپ کو دیکھا تاریخ نے ایمان کی شرط لازمی ہے ہے ہے ہے ہےچائے اے سی صاحب کہتے ہیں کہ انہوں نے اپنا سوال ایمیل کردیا ہے ہے اچھا اگر آپ دوبارہ آپ کہہ رہے ہیں کہ آپ نے ای میل کیا ہے لیکن آپ کو جواب نہیں آیا اگر آپ دوبارہ ان کو بھی سینڈ کر دیں تو انشاءاللہ تعالیٰ وہ سامنے آ جائیں گے ہمیں اس ٹیم کو ہمارا سلام کی ٹیم ہے پروگرام کی ہماری ٹیم کو تقریبا ہر روز کی ای میلز آتی ہیں اور بعض فہد مصطفیٰ دن میں تھوڑا ٹائم لگ جاتا ہے کچھ بھی نہیں کرنی پڑتی ہے جواب دینا پڑتا ہے اگر کسی کے سوال کا جواب دینے میں تھوڑی دیر لگ جائے لگ جائیں معذرت بعض دفعہ یہ بھی ہوتا ہے کہ وہ نیچے چلی جاتی ہے بہت کم دکھائی دیتی 2012 کو ٹیگ کریں گے ابھی سینڈ کر دیں گے تو وہ ہماری ای میل ان باکس میں پڑھا جائے گی گی پلیز جواب پروگرام اسلامی کانٹا شناوری آج سے آپ کی مراد ہے کہ بیلنس ہے انشاء اللہ تعالی اس پر بھی کسی وقت ایک پروگرام چلا ضرور کریں گے سوال ہے کہ کیا جماعت یا میں تعبیر رویا کے موضوع پر کوئی کتاب ہے بالکل ہے حضرت اقدس مسیح موعود علیہ السلام کی تحریرات سے مرکز بنا کر کے ایک کتابچہ تیار کیا گیا ہماری ویب سائٹ پر غالب آیا شاید وہ موجود بھی ہے السلام کے آئے تو وہاں سے بھی آپ دیکھ سکتے ہیں کہ یہ کہ ان شاء اللہ اس پروگرام کے بعد اٹھ کے تو اسی اگر مسئلہ کو حل نکل جاتا اس کتاب کا تو ایسی ویڈیو کی ڈسکرپشن باکس میں خاکسار اس کتاب کا علم ہے وہ بھی لگا کہ اس نے جو پڑھا جائے کے بارے میں ایک دوست کہتے ہیں کہ جی انہوں نے ان کی ویب سائٹ فیملی جو ہے مومن کی ویب سائٹ پر پیش کیا ہے وہ یہ کہتی ہیں کوالٹی ایجوکیشن تو اسلام میں مساوات کی تعلیم دی گئی ہے جو صلی اللہ علیہ وسلم کے قریب ہے آپ نے فرمایا ہر شخص خدا کی نظر میں اس طرح برابر ہے جس طرح کے کنگھی کے دانے ہوتے ہیں جن سے اللہ کے بندے ہوتے ہیں اسی طرح ہر انسان اللہ تعالی کی نظر میں برابر ہے تفریح جس سے ہوتی ہے تو وہ جو تقویٰ میں آگے نکل جائے گا اس کا مفہوم واضح کرتے ہیں جو تقوی کے میدان میں آگے نکل گئی وہ مردوں سے آگے نکل گئی اور وہ مرجع تقلید کے میدان میں زیادہ آگے سرنگوں ہوجانے نکل جائیں گے تو اصل تفریح کی چیز ڈالی ٹوائے انا اکرمکم عند اللہ اتقاکم ایجوکیشن کی تو وہ لوگ یہ کہتے ہیں کہ یہ عورت کا کام صرف گھر کے کام کرنا ہے اور اس کا تعلیم سے کیا لینا دینا تو وہ بھی اسلام کی تعلیم کو بھلا کہ اس قسم کی جاہلانہ بات کرتے ہیں کیوں کہ اسلام اس بات کی تعلیم دیتا ہے کہ عورتوں کو بھی تعلیم دی جائے تبھی تو ہمارے پیارے آقا حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ علم حاصل کرنا مومن مرد اور مومن عورت مسلمان مرد مسلمان عورت پر یکساں فرض ہے تو یہ فرمائیں کہ مردوں کے لئے فرض ہے عورتوں کی نہیں فرمایا ہر دو پردہ دکھا دے تو تعلیم کی اگر بات کی جائے تو اسلام یہ کہتا ہے کہ کوالٹی کی مساوات کی بات کی جائے تو اسلامی دیتا ہے ہے بعض خواتین یہ کہتی ہے کہ جی کوالٹی سے مراد یہ ہے کہ جسمانی طاقتوں کے لحاظ سے کوالٹی ہے یہ بات غلط ہے جس کے لیے کوالٹی ہے کہ میں ہاں دوسرے دن میں کوالٹی ضروری ہے کہ انسان کی ایک بار ہوتی ہے جن میں برابر ہیں کسی کو کسی پر فوقیت ہے یہ نہیں کہ مرد زیادہ عورتیں کم اہمیت عورت کی زیادہ اہمیت ہے یہ عمر بھی کم ہے دونوں اللہ تعالی کی نظر میں برابر ہے ہاں جہاں پر جسمانی صلاحیتوں کی بات آتی ہے بعض چیزوں میں عورتوں کو اللہ تعالی نے زیادہ درست فرمایا مسلم ہے کہ عورت بچہ پیدا کرتے مر نہیں کر سکتا عورت میں بچہ پیدا کرتے وقت کی جو تکلیف ہوتی ہے جس کی تکلیف اس کو برداشت کرنے کا جو اللہ تعالی نے اس کے اندر ایک مادہ رکھا اکبر کا مطلب ہے اس مرد حضرات بھی پہنچتے ڈاکٹر کہتے ہیں کہ جس تقلید سے انہوں نے اس وقت گزر رہی ہوتی ہے اگر اس کا ایک چھوٹا سا حصہ بھی مرد کو اٹھانا پڑے تو عین ممکن ہے کہ مرد کی وفات ہوگئی ہے تو میں نے اردو کو جو ہے وہ زیادہ طاقت عطا کی ہے اور بعض دوسری باتوں میں اللہ تعالی نے مردوں کو داتا کیا اسی وجہ سے جب سپورٹس وغیرہ بھی کمپیٹیشن ہوتے ہیں تو مردوں کے الگ ہو تو کیا لگتے ہیں تو جو بھی ٹینشن ہوگی اسلام کا جواب اسد فیشن کے مطابق جواب دیا جائے گاعائشہ کی طرف سے پیغام ہے آپ کہتی ہیں کہ مولوی صاحب آپ ملتے نہیں ہیں روز لائیو آجاتے ہیں اور باتیں بیان کرتے ہیں لوگوں کے سوالوں کے جواب دیتی ہیں بات یہ کہ میں نے بھی میری طرح ہزاروں کی تعداد میں اللہ تعالی کے فضل سے جماعت کے مبلغین ہیں عامر بیان ہیں ہم نے تو زندگی کی اس کام کے لیے بات کی ہے ہم نے جب زندگی وقف کرنے کا ارادہ کیا تو اس وقت یہ بات اپنے ذہن میں بٹھا لیں کہ ہماری زندگی کا ہر لمحہ ہماری آخری سانس تک اسلامیت کی خدمت کے لیے وقف ہے انسانیت کی خدمت کے لیے وقف ہے تو انسان ہے تھک جاتے ہیں لیکن یہ کہ ہمارے لیے یہی ہماری زندگی کا اصل مقصد ہے کہ ہم اپنی زندگی کا ہر لمحہ اللہ تعالی کے دین کی خدمت اور اللہ تعالی کے لوگوں کی خدمت کے لیے گزارے تو آپ لوگوں سے گزارش ہے آپ میرے لئے میری طرح ہزاروں مربع یا نہیں اور میں ان کے علاوہ دوسرے واقعہ میں جو ہیں ہم سب کے لئے ایک اسی طرح دوسرے کارکنان وغیرہ ہیں نہیں ادھر ان سب کو اپنی دعاؤں میں یاد رکھیں لیکن سب سے بڑھ کے سب سے بڑھ کے اس وجود کو اپنی دعاؤں میں یاد رکھیں کہ جس کی برکت کے نتیجے میں ہم لوگوں کی خدمت کی توفیق مل گیا اور وہ تکلیف ہوتی ہے ہمارے پیارے آقا حضرت علامہ سید علی جو ہر وقت بنی نوع انسان کی خدمت کر رہے ہیں سب سے زیادہ ہماری دعاؤں کے مستحق کو ہدایت دے ہمارا پیارا امام ہے ہے ہے اچھا ابراہیم جمال شاہ صاحب کہتے ہیں کہ ان کا کوئی سوال ہے اوپر آیا گیا ہے تو مجھے مل جائے آپ کہتے ہیں جی جو میں بھی ہے اس نے فاطمہ کو نسل ہونا تھا اگر نہیں تو پھر پلیز پروائڈ فیصل آباد سے استعفیٰ دیا حدیث اینڈ برودر جال ریکارڈنگ جناب قائم آل محمد علیہ السلام ٹھیک ہے انشاء اللہ تعالی آپ کی تسلی کے لیے ایک پروگرام شروع کردیں گے ابھی تو جو کہ میرے پاس اس وقت میرے سامنے والے نہیں ہے لہذا اس سوال کا جواب نہیں دے سکتا لیکن یہ کہ حوالہ جات وغیرہ جب بچے ہو جائیں گے تو اگر کسی پروگرام میں ان شاء اللہ تعالی ہم آپ کے سوال کا تفصیل کے ساتھ جواب دیا ہے وہاں پر مجبور کر دے گی طور پر یہ بتا دینا کافی ہے کہ امام مہدی کے بارے میں جتنی بھی احادیث آئی ہیں سب میں کچھ نہ کچھ اختلاف پایا جاتا ہے مثلا شادی بیاہ کے امام مہدی جو ہوگا وہ حضرت فاطمہ الزہرا رضی اللہ تعالی عنہ کی نسل سے ہوگا ان کو کسی اور کینسر سے بچاتے ہیں بعض روایات کہتے ہیں کہ وہ صرف ایک فرد ہوگا جو حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم کی امت میں سے ہوگا تو کسی قسم کی روایات آتی ہیں ہیں ہیں وہ کونسی والی روایت ہے اس کو زیادہ ترجیح دیتے ہیں کسی میں بھی کوئی فرق نہیں بعض دوسری روایات کو ترجیح دیتے ہیں سنی گئے ہیں ان میں بھی مختلف مکتبہ فکر کے لوگ پائے جاتے ہیں کوئی کسی روایت کو ترجیح دیتے ہیں کوئ کسی روایت کو ترجیح دیتا ہے روٹی کے لئے تو یہ آپ کا سوال باقی سب کے ساتھ بھی ہونی چاہیے کہ جی آپ اگر اس حدیث کو مانتے ہیں کہ چیف منسٹر کون ہے تو آپ کے پاس اس بات کی کیا دلیل ہے کہ خواتین جو پیسے آپ کو کہہ رہے ہیں وہ درایت کے لحاظ سے بھی اور روایت کے لحاظ سے بھی ہاتھ دھو لحاظ سے بے وفائی کی اور سند کی ہے ہے آئی آپ کہتے ہیں کی تقوی کے کپڑے سے کیا مراد ہے اس کے ذریعے اپنی حفاظت کرتا ہے گھر کا انتظام کرتا ہے اور اسی طرح کپڑے کے ذریعے انسان جو ہے اپنی اپنے اوپر نیم تو کبھی اظہار جو ہوتا کی وہ بھی کپڑوں کے لئے انسان کرتا ہے تو تقوی کے کپڑے سے کیا مراد ہے تقویٰ کے کپڑے سے وہ تمام مقاصد ایک لباس کی زندگی کی پوری ہوتی ہیں اللہ تعالی نے فرمایا کہ یہ روح کا لباس ہے جس سے جسم کا لباس کپڑے ہوتے ہیں اسی طرح روح کا لباس جائے تو اس کو کس طرح پیدا ہوتا ہے تقوی دین کی باتوں پر عمل کرنے سے یہی اللہ تعالی کے حکم پر اطاعت اللہ کی اطاعت کرنے اور اللہ کے رسول کی اطاعت کرنا خدا کے خلیفہ کی دھڑکنیں اور دین کے احکامات جو اللہ تعالی نے قرآن پاک میں ساتواں حکم بیان فرمایا ان پر عمل کرنے سے انسان تک پیدا ہوتا ہے اور ان تمام باتوں کو کی جڑ تمام باتوں کی پھلیاںسوال آیا ہے آپ کہتی ہیں کہ جب آپ کی جائیداد میں بہنوں کا بھی اطلاق ہوتا ہے لیکن ان کی وفات کے بعد اگر برا نہ مانیں تو بھائیوں کو برا لگتا ہے تو پھر کیا کرے ایسے کیس میں پابندی ہیں آپ کو چاہیے کہ پھر آپ کا جماعت سے رابطہ کرے اور جماعت میں باقاعدہ شعبہ ہے وہ اس میں آپ کی رہنمائی کرتی ہے کرے گا اور اگر آپ بھی نہیں ہے آپ سے باہر گئے ہیں جمعہ تعلق نہیں ہے تو اس صورت میں بنیادی طور پر بات بھی یاد رکھنے والی ہے کہ یہ شریعت اسلام کے اندر ایک بنیادی بات ہے کہ والدین کی جائیداد میں بچیوں کا بھی حق ہے بیٹوں کو یہ اختیار اللہ تعالی نے دیا کہ وہ اس کے اوپر اپنی رائے پاس پیپر وہ اس کو غصب کرلی اور اس کے اوپر جارحانہ طور پر اپنا قبضہ جما لیا اور بہنوں کو آسرا دے جو یہ کام کرتے ہیں ان کے لیے شدید تنبیہ رسول پاک سے کیا آپ نے فرمایا جو کسی کی جائیداد میں حصہ آتا ہے یہ نہیں ہے لیکن سوال یہ ہے کہ جوہر مارتا ہے جو کسی کی زمین لیتا ہے وہ زمین قیامت کے روز اس کے گلے کا طوق بن جائے گی گیمبر جائے گی تو وہ اپنی بہنوں کو حق نہیں دیتے ہیں اور یہ سوچتے ہیں کہ یہ اس دنیا میں 10 پیسے لے لیں گے اور اس طرح پے اپنی بہنوں کا حکم کو نہیں دینا پڑے گا ان کے لیے رسول پاک صل وسلم کی یہ تنبیہ کافی ہونی چاہیے اور اگر وہ پھر بھی اپنے عمل کو نہیں بدلتے اور غاصبانہ اورظالمانہ رویہ رکھتے ہیں تو پھر اللہ تعالی کی پکڑ سے ڈرنا چاہیے اس دنیا میں بھی ہے اے بعض دوست احباب لائیو پروگرام میں اپنے خوابوں کی تعبیر طلب کرنا چاہتے ہیں میں کوئی معبود نہیں میں کوئی ایسا انسان نہیں ہوں کہ میں خوابوں کی تعبیر بھرا جو ہے وہ کر سکتا ہوں ہاں کتابوں سے پڑھ کے آپ کو حوالہ جات وغیرہ بتا سکتا ہوں لیکن اس کے لیے کتابوں کا میرے سامنے ہونا ضروری ہے اس لیے اس قسم کے درمیان آپ کے سوالات ہوں بہتر یہ ہے کہ آپ کو بذریعہ ای میل مطلع کریں ہمارا جو ہے وہ ایک فلم کی طرح دوبارہ دیکھیں نبیلہ کی طرف سے سوال ہے کہ جب سال کی عمر میں روزہ فرض ہوتے ہیں کیونکہ وہاں پہ جاکے انسان جو ہے وہ بالغ ہو جاتا ہے اور اس کے علم حاصل کر چکا ہوتا ہے اور اس کا زمانہ گزر رہا تھا اس سے پہلے تو بچپن کے زمانے کرنے چلا ہے آپ کی ایک کیا نون لیگ نے بھی چیز کو مانتے ہیں جی مجھے پتا نہیں آپ ہوندی جو حضرات اس سے پوچھنا پڑے گا ہماری جماعت میں تو بڑا آسان ہے حضور صلی علیہ وسلم نے فرمایا تھا کہ علیکم بسنتی وسنت الخلفاء الراشدین علی ہیں کہ قرآن کے بعد تمہارے اوپر میری سنت اور میرے خلفاء کی سنت ہے ہماری جماعت میں ہمارے سامنے یہ مثال موجود ہے کہ حضرت خلیفۃ المسیح الثانی رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ تھے ان کو چھوٹی عمر میں حضرت مسیح موعود علیہ السلام روزے نہیں رکھنے دیتے اور خود حضرت مصلح موعود رضی اللہ تعالی عنہ نبی اکرم نے فرمایا کہ پچھلے سال کا پندرہ سال کی عمر جب پہنچا ہوں جاتا ہے یہ بچی ہو جاتی ہے تو وہاں پر کچھ روزے کو رونا شروع کریں پندرہ روزہ رکھ لیں گے اور پھر تھوڑا دیں اس طرح کے طور پر اگر دیکھا جائے تو یہ لڑکی تو پھر مجھے بتائیں کہ آپ کے روز ہی تم نے پورے روزے رکھے ہیں سوال آیا ڈاکٹر کے بارے میں اسلام کیا کہتا ہے قرآن مجید کیا کہتا ہے اگر انسان استطاعت رکھتا ہے کسی بچے کو ادا کرنے کی ضرورت کرنا چاہئے ہاں اگر آپ کیا ہوتا ہے اس کو انسانیت اس کی اپنی ولدیت جوتی ہے اسی کے مطابق اس کا نام ہونا چاہیے محسن عالم صلی اللہ علیہ وسلم کے آزاد کردہ غلام تھے جن کا نام زیادہ عرصہ تو قرآن پاک میں اللہ تعالی کی طرف سے عید آنے سے پہلے اس معاشرے میں ادب کے معاشرے میں زید بن محمد کے نام سے جانے جاتے تھے جو کہ انسان کو گود لیا تھا لیکن جب اللہ تعالی کی طرف سے رہنمائی آیت نازل ہوئی تو اللہ تعالی نے منع فرما دیا اس نے یہ کہتے ہوئے کہ بچوں کو جو لے پالک بچے ہوتے ہیں ان کو ان کے اصل والد کے نام کے ساتھ یاد کیا جانا چاہیے تو اس دن سے پھر جائے بن محمد کا نام بدلنے سے زیادہ اس ہیں واپس انکی ولایت کے ساتھ یا وہ چھوڑ دیا گیالالہ کے چالیس منٹ میں فون نہیں اٹھایا تھا اب بھی بعض لوگوں کے میسجز وغیرہ ہیں تو جو رہ گیا ان سے معذرت آپ لوگ اپنی اگر کوئی سوال آپ کے رہ گئے ہیں بے شک میں بھی بھیج دیں کوشش کرکے ای میل کا جواب دے دیا جائے گا ورنہ یہ کل بھی اس پروگرام میں آنا ہے آپ نے مجھے چین آتا ہے تو انشاء اللہ تعالی آج اس کے سوا نہیں لیا جاسکتا تو کل یا پرسوں نبی پیش کرتے ہیں اس کا جواب کس نے کسی اور کے آپ کو دے دیا جائے گا اس کے ساتھ ہی اپنے پروگرام کو ختم کرتے ہیں آخر میں اپنے پیارے آقا حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم سید الانبیاء خاتم النبیین والمرسلین کی ذات پر درود بھیج کر اس پروگرام کو اس کے اختتام تک لے کے چلتے ہیں اللہ ہم صلی علیٰ محمد وعلیٰ آل محمد کما صلیت علی ابراھیم وعلی ال ابراھیم انک حمید مجید اللھم بارک علی محمد وعلی آل محمد کما بارکت علی ابراہیم علیہ السلام علی من اتبع الھدیٰہے تو خطا اس میں تیری کیا کمیٹی رقبہ status in this

 46 total views,  2 views today

Leave a Reply

%d bloggers like this: